• تاریخ: 2012 ستمبر 03

روزہ ناقابل ترک مطلق


           

 

پروردگار نے ایک ضعیف انسانوں سے روزہ ساقط کر کے اپنے رحم و کرم کا اعلان کیا ہے اور دوسری طرف حائضہ عورت پر قضا واجب کر کے یہ ثابت کر دیا ہے کہ روزہ ترک مطلق کے قابل نہیں ہے اور وہ بعض حالات میں ترک بھی ہو جائے تو اس کی قضا بہر حال واجب ہے جب کہ نماز ترک مطلق کا شکار ہو سکتی ہے اور حائضہ عورت کو ایام حیض کی نمازوں کی کی قضا نہیں کرنا ہے حالانکہ عام تصور کا اندازہ ہوتا ہے کہ اس نے فروع دین میں اول نماز کر رکھا ہے اور بعد روزہ کا درجہ قرار دیا ہے۔

ماخوذ از کتاب اصول و فروع علامہ جوادی 

Copyright © 2009 The AhlulBayt World Assembly . All right reserved